dil hi to hai na sang o khisht lyrics

ghazal dil hi to hai na sang o khisht lyrics

دِل ہی تو ہے نہ سنگ و خشت درد سے بھر نہ آئے کیوں

رویئں گے ہم ہزار بار کوئی ہمیں ستاۓ کیوں

دیر نہیں حرم نہیں در نہیں آستاں نہیں

بیٹھے ہیں رہ گزر پہ ہم  غیر ہمیں اُٹھائے کیوں

جب وہ جمال دل فروز صورت مہر  نیم روز

آپ ہی ہو نظارہ سوز پردے میں منہ چھُپائے کیوں

دشنہ ء غمزہ  جاں ستاں ناوک  ناز بے پناہ

تیرا ہی عکس  رُخ سہی  سامنے تیرے آئے کیوں

قیدِ حیات و بندِّ غم اصل دونوں ایک ہیں

موت سے پہلے آدمی غم سے نجات پاۓ کیوں

حسن  اور اس پہ حسن ظن  رہ گئی  بو الہواس  کی شرم

اپنے پہ اعتماد ہے  غیر کو آزمائے کیوں

واں وہ غرور عز و ناز یاں یہ حجاب  پاس  وضع

Advertisement

راہ میں ہم مِلیں کہاں بزم میں وہ بُلائے کیوں

ہاں وہ  نہیں خُدا پرست  جاو وہ  بے وفا سہی

جس کو ہو دین و دل عزیز  اس کی گلی میں جائے کیوں

غالبِ خستہ کے بغیر کون سے کام بند ہیں 

رویئے زار زار کیا کیجیے ہاۓ ہاۓ کیوں

ghazal dil hi to hai na sang o khisht lyrics

dil hi tu hai na sang o khisht dard say bher na aaye kiyun

royain gaiy ham hazar bar koi hamain sitaye kiyun

Dair nahi haram nahi dar nahi aastan nahi

Baithay hain rah guzar pay ham ghair hamain uthaye kiyun

Jab wo jamal dil faroz surat e meher e neem roz

Aap hi ho nizara soz parday main munh chupaye kiyun

Dashna e ghamza jan sitan nawak naz bay panah

Tera hi aks e rukh sahi samnay tery aaye kiyun

qaid e hiyat o band e gham asal main dono aik hain

maut say pehly aadmi gham say najat paye kiyun

Husn aur us pay husn e zan rah gai bul hawas his sharam

Apnay pay etimad hai gher ko aazmaye kiyun

Waan wo gharor izz o nazyan yeh hijab pass e wazah

Rah main ham milain kahan bazam main wo bulaye kiyun

Han wo nahi khuda parast jao wo baywafa sahi

Jis ko ho deen o dil aziz us ki gali main jaye kiyun

Ghalib e khasta kay bagher kon say kamm band hain

royye zaar zaar kiya kijye haye haye kiyun

read more

thanx for free image download

https://www.pexels.com/

Leave a Reply

Your email address will not be published.

CommentLuv badge
%d bloggers like this: