Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

khumar barabankvi poetry urdu

read khumar barabankvi poetry urdu

دشمنوں سے پیار ہوتا جاۓ گا

دوستوں کو آزماتے جائیے

dushmano say piyar hota jaye ga

doston ko aazmaty jaye

وہی پھر مٌجھے یاد آنے لگے ہیں

جنھیں بھولنے میں زمانے لگے ہیں

vohi phir mujhy yaad aany lagy hain

jinhain bholnay main zamany lagy hain

حدّ سے بڑھے جو عِلم تو ہے جہل دوستو

سب کچھ جو جانتے ہیں وہ کٌچھ جانتے نہیں

had say bharry jo ilm tuu hai jahl dosto

sab kuch jo janty hain vo kuch janty nahi

الہی میرے دوست ہوں خیریت سے

یہ کیوں گھر میں پتھر نہیں آ رہے ہیں

ellahi mery dost hon kharriyat say

ye kiyun ghar main pathar nahi aa rahy

khumar barabankvi poetry urdu

بھولے ہیں رفتہ رفتہ انہیں مٌدتوں میں ہم

قسطوں میں خودکشی کا مزا ہم سے پوچھیے

bholay hain rafta rafta unhain muddaton say ham

qiston main khudkashi ka maza ham say lijye

ہٹاۓ تھے جو راہ سے دوستوں کی

وہ پتھر میرے گھر میں آنے لگے ہیں

hataye thay jo rah say doston ki

vo pather mery ghar main aanay lagay hain

تٌجھ کو برباد تو ہونا تھا بہرحال خٌماؔر

ناز کر ناز کہ اس نے تٌجھے برباد کیا

tujh ko barbad tu hona tha behrhal khumar

naz kar naz keh us nay tujhy barbad kiya

read more

سکوں ہی سکوں ہے خوشی ہی خوشی ہے

تیرا غم سلامت مٌجھے کیا کمی ہے

read more

Leave a Reply

Your email address will not be published.

CommentLuv badge