baqa e dil ke liye lyrics

read ghazal baqa e dil ke liye lyrics

بقاۓ دِل کے لۓ جو لہو ضروری ہے

اِسی طرح میرے جیون میں تٌو ضروری ہے

یہ عقل والے نہیں اہلِ دِل سمجھتے ہیں

کہ کیوں شراب سے پہلے وَضّو ضروری ہے

خٌدا کو مٌنہ بھی دِکھانا ہے ایک دِن یارو

وفا مِلے نہ مِلے جٌستجو ضروری ہے

کلی اٌمید کی کھِلتی نہیں ہر اِک دِل میں

ہر ایک دِل میں مگر آرزو ضروری ہے

Advertisement

ہے احترام بھی لازم کہ ذکر ہے اٌس کا

جِگر کا چاک بھی ہونا،  رفّو ضروری ہے

ہزار   اِن  کے  عوض  نفرتیں  مِلیں

مُحبّتوں  کی   مگر  آبرو   ضروری  ہے

ghazal baqa e dil ke liye lyrics

baqa-e- dil kay liye jo laho zarori hai

issi tarah mary jewan main tu zarori hai

ye aql waly nahi ahl e dil samjhtay hain

keh kiyun sharab say pehly wuzu zarori hai

khuda ko munh bhi dikhana hai aik din yaro

wafa mily na mily justju zarori hai

kali umeed ki khilti nahi har ik dil main

har aik dil main magar aarzo zarori hai

hai ehtram bhi lazam keh zikar hai us ka

jigar ka chak bhi hona, rafu zarori hai

hazar inn kay ewaz nafratain milain

muhabbaton ki magar aabru zaruri hai

read more

thanx for free image download

https://all-free-download.com/

Leave a Reply

Your email address will not be published.

CommentLuv badge
%d bloggers like this: