aye dard e hijra yaar ghazal keh raha lyrics

A fantastic ghazal “aye dard e hijra yaar”, is written by nasir kazmi

aye dard e hijra yaar ghazal keh raha hon main

Be mausam e bahar ghazal keh raha hoon main

Mere biyan gham ka tasalsal na tut jae

Gasu zara sanwar ghazal keh raha hoon main

Raz o niaz ishq main kiya dakhl hay tera

Hat fikar e rozgar ghazal keh raha hoon main

Saqi bayan e shauq main ranginiyan bhi ho

La jam e khushgwar ghazal keh raha hoon main

Tujh sa sukhn shnas koi dusra nahi

Sun lay khiyal e yar ghazal keh raha hoon main

Nasir kazmi

urdu lyrics اے دردِ ہجر یار غزل

اے دردِ ہجر یار غزل کہہ رہا ہوں میں           بے موسمِ بہار غزل کہہ رہا ہوں میں

میرے بیانِ غم کا تسلسل نہ ٹوٹ جائے          گیسو ذرا سنوار غزل کہہ رہا ہوں میں

راز و نیازِ عشق میں کیا دخل ہے ترا               ہٹ فکرِ روزگار غزل کہہ رہا ہوں میں

ساقی بیانِ شوق میں رنگینیاں بھی ہو             لا جامِ خوشگوار غزل کہہ رہا ہوں میں

تجھ سا سخن شناس کو ئی دوسرا نہیں             سن لے خیالِ یار غزل کہہ رہا ہوں میں

ناصر کاظمی

read more

thanx for free image download

https://unsplash.com/

Leave a Reply

Your email address will not be published.

CommentLuv badge

%d bloggers like this: